پی پی ایل نے لگاتار 12 ہویں سال کارپوریٹ فیلنتھراپی ایوارڈ حاصل کرلیا

اسلام آباد،7 فروری 2017 : پاکستان پیٹرولئیم لمیٹڈ(پی پی ایل) کو پاکستان سینٹر فار فیلنتھراپی کی جانب سے 7 فروری کو اسلام آباد میں منعقد ہونے والے کارپوریٹ فیلنتھراپی ایوارڈ میں سال2015 کے دوران دیئے جانے والے عطیات کے مجموعی حجم کے لحاظ سے کا رپوریٹ سیکٹر میں دوسرے نمبرپر سب سے زیادہ فلاحی امداد دینے والے ادارے کی حیثیت سے تسلیم کرلیا گیا۔ کمپنی نے اسی شعبے میں یہ ایوارڈ لگاتاربارہویں سال کے لئے حاصل کیا ہے۔

عزت مآب صدر ِ پاکستان ممنون حسین نے پی پی ایل کے مینیجنگ ڈائریکٹروچیف ایگزیکٹو آفیسر سید وامق بخاری کو ایوارڈ پیش کیا۔ تقریب میں صف ِ اوّل کے کاروباری افراد، حکومتی اور سماجی شعبوں کے نمائندﺅں، میڈیا اورعطیات دہندگان نے شرکت کی۔ ایک قومی کمپنی ہونے کی حیثیت سے پی پی ایل ملکی ترقی میں ایک لمبے عرصے سے شراکت دار ہونے پر فخر محسوس کرتی ہے اور اپنی ترقی کے ثمرات کوپسماندہ آبادیوں تک پہنچانے پریقین رکھتی ہے۔ قابلِ توجہ بات یہ ہے کہ پی پی ایل کے قبل از ٹیکس منافع کا 1.5 فیصد سماجی بھلائی کے کاموں کے لئے مختص ہے تاہم اصل اخراجات اس سے کہیں زیادہ ہوتے ہیں۔ 2015-2016 میں ہی اس مد میں اخراجات 990 ملین روپے سے زائد تک جا پہنچے ۔

چھ عشروں پر محیط ، ایک قابلِ عمل پروگرام کے تحت، کمپنی معیاری صحت، تعلیم ، روزگار کے مواقع، تعمیرات، قدرتی آفات کے بعد متاثرہ آبادی کی امداد اور بحالی، خصوصاً آپریشنل علاقوں کے گردونواح میں بسنے والوں کی فلاح میں مصروفِ عمل ہے۔ حال ہی میں، پی پی ایل نے اپنے سی ایس آر پروگرام کو مزید مستحکم کرتے ہوئے ان قابل اعتبار سماجی بھلائی کے اداروں کی اعانت کی ہے جو شہری علاقوں کی پسماندہ آبادی کا معیارِزندگی بہتر بنانے پر کام کررہے ہیں۔

پی پی ایل اپنے فلاحی کاموں کے دوراس اثرات کو ممکن بنانے کے لئے ایک شراکتی عمل کے ذریعے ضروریات کے تعین اور متعلقہ افراد سے مشاورت کرتی ہے ساتھ ہی سہولیات کی فراہمی میں مزید بہتری لانے کے لئے اقدامات کی گہری نگرانی اور معائنے کے ساتھ تجربات سے حاصل ہونے والے سبق سے سیکھنے پر بھی زور دیتی ہے۔

News Image

(دائیں سے بائیں) ایم ڈی و سی ای او پی پی ایل سید وامق بخاری، عزت مآب صدر پاکستان ممنون حسین سے کارپوریٹ فیلنتھراپی ایوارڈ وصول کرتے ہوئے۔ (دائیں سے تیسرے ) پاکستان سینٹر برائے فیلنتھراپی کے بورڈ آف ڈائیریکٹرز کے چیئر مین ظفر خان بھی اس موقع پر موجود ہیں۔