پی پی ایل بلوچستان کپ 2017 آخری مرحلے میں داخل

کوئٹہ ،20 مارچ 2017 : ملک کی حالیہ تاریخ میں کسی بھی ادارے کے تعاون سے منعقد ہونے والا سب سے بڑا فٹبال ٹورنامنٹ پاکستان پیٹرولئیم لمیٹڈ (پی پی ایل) بلوچستان فٹبال کپ2017 ضلعی سطح پر صوبے کے چھ ڈویژنز ۔کوئٹہ ، قلات، مکران، سبّی، ژوب اور نصیر آباد میں کھیلے گئے میچزکے مکمل ہونے کے بعد20 مارچ کو اپنے آخری مرحلے میں داخل ہو رہا ہے۔جس کے لئے نوشکی، کوئٹہ سٹی، لورالائی، شیرانی، تربت ، پنجگور، خاران، لسبیلہ، سبی اور جعفرآباد کی ٹیموں نے کوالیفائی کر لیا ہے جبکہ2016 کے ٹورنامنٹ کی فاتح اور رنر۔اپ ٹیمیں کوئٹہ اور چمن فائنل راؤنڈ کے لئے پہلے ہی منتخب ہو چکی ہیں۔

فائنل راؤنڈ کا آغاز صادق شہید فٹبال اسٹیڈیم(مالی باغ) ،کوئٹہ میں منعقد ہونے والی ایک پروقار افتتاحی تقریب میں ہوا۔ جس میں مہمانِ خصوصی گورنر بلوچستان محمد خان اچکزئی، پی پی ایل کے ایم ڈی و سی ای او سید وامق بخاری، پی پی ایل بلوچستان فٹبال کپ 2017 کی انتظامی کمیٹی کے چیئرمین سردارنوید حیدر خان ،علاقائی عمائیدین، ٹورنامنٹ کے سفیروں ، میڈیا ودیگر مہمانوں نے بھی شرکت کی۔

تقریب میں خطاب کرتے ہوئے پی پی ایل کے ایم ڈی سید وامق بخاری نے کہا" میں اس بات پر مسرت محسوس کرتا ہوں کہ کھلاڑیوں کے جوش و جذبے کے ساتھ ساتھ مقامی آبادی کے تعاون سے جنہوں نے میدان میں پہنچ کر کھلاڑیوںکی حوصلہ افزائی کی ، جس کی بدولت انتہائی پر امن ماحول میں کوالیفائنگ راؤنڈ کے 55 میچزکھےلے گئے۔ پی پی ایل بلوچستان فٹبال کپ2017 گذشتہ سال کے مقابلے میں کئی گنا بڑا ٹورنامنٹ بن گیا ہے جو بنیادی سطح پر مقامی نوجوانوں کو اپنے پسندیدہ کھیل میں صلاحیتوں کے جوہر دکھانے اور اسے پروان چڑھانے کا موقع فراہم کر رہا ہے۔

وامق بخاری نے صوبائی حکومت، پاکستان فٹبال فیڈریشن، بلوچستان فٹبال ایسوسی ایشن اور ٹورنامنٹ کے سفیروں محمد عیسیٰ خان ، زاہد حمید، سعد اللہ، شیر علی، نصر اللہ خان اور محمود علی کے تعاون پر ان کا شکریہ ادا کیا۔

اس موقع پر محمد خان اچکزئی نے صوبے میں امن و خوشحالی کے فروغ کے سلسلے میں میگا ایونٹ کے کامیاب انعقاد پر پی پی ایل اور اس کے شراکت داروں کی تعریف کی۔ انہوں نے فائنل راؤنڈ کے لئے کوالیفائی کرنے والی ٹیموں کی کامیابی کے لئے نیک خواہشات کا اظہار کیا۔

پی پی ایل، ضلعی سطح پر اور فائنل راؤنڈ میں حصہ لینے والی ٹیموں کو پر کشش مراعات فراہم کررہی ہے۔ ساتھ ہی دیگر اخراجات کے علاوہ کمپنی کھلاڑیوں کو اسپورٹس کٹ بھی مہیا کئی گئی ہے تاکہ تمام علاقوں سے کھلاڑیوں کی زیادہ سے زیادہ شرکت کو ممکن بنایا جاسکے۔ کمپنی نے ان فٹبال گراؤنڈز ،جہاں یہ میچ کھیلے گئے ہیں، کی بحالی کے لئے بھی اخراجات کئے ہیں۔

دونوں سیمی فائنلز 31 مارچ کوجبکہ فائنل میچ2اپریل کوصادق شہید فٹبال اسٹیڈیم(مالی باغ)، کوئٹہ میں کھیلے جائیں گے۔ مجموعی طور پر ٹورنامنٹ میں74 میچزکھیلے جائیں گے جن میں 37 ٹیمیں حصہ لے رہی ہیں ۔