پی پی ایل بلوچستان فٹبال کپ 2016 آخری مرحلے میں داخل

کوئٹہ، 6 اگست : 2016 گورنر بلوچستان محمد خان اچکزئی نے 6 اگست کو ایوب اسٹیڈیم ، کوئٹہ میں منعقد ہونے والی تقریب میں پاکستان پیٹرولیٔم لمیٹڈ )پی پی ایل(کے تعاون سے کھیلے جا رہے پی پی ایل بلوچستان فٹبال کپ 2016 کے آخری مرحلے کا افتتاح کیا۔

کمانڈر سدرن کمانڈ، لیفٹنٹ جنرل عامر ریاض)ہلال امیتاز۔ ملٹری(، صوبائی وزیر کھیل میر مجیب الرحمن محمد حسنی نے دیگرعہدےداران و علاقائی عمائدین کے ہمراہ تقریب میں شرکت کی۔ میڈیا کے نمائندگان بھی اس موقع پر موجود تھے۔

محمد خان اچکزئی نے ٹورنامنٹ کے لئے پی پی ایل کے تعاون کو سراہا اور اسے صوبے میں مثبت سماجی تبدیلی لانے میں پیش رفت قرار دیتے ہوئے کہا کہ" ہم اپنی مقامی آبادیوں اور آنے والی نسلوں کے لئے امن اور سماجی و اقتصادی بہتری کے خواہاں ہیں" ۔

اس میگا ایونٹ کا آغاز26 جولائی 2016 کو ہوا جس میں چھ صوبائی ڈویژنز کوئٹہ ، قلات، مکران، سبی، ژوب اور نصیر آباد کی 32 ٹیموں نے حصہ لیا جن کے درمیان کولیفائنگ راﺅنڈ میں 26 میچز کھیلے گئے۔ قلعہ عبداللہ) چمن(، ہرنائی ، لورالائی، خضدار، تربت، خاران، کوئٹہ اور جعفر آبادکی ٹیموں نے 7 اور8 اگست کو کھیلے جانے والے کوارٹر فائنلز کے لئے کولیفائی کرلیا ہے جس کے بعد 10 اگست کو سیمی فائنلز اور12 اگست کو فائنل میچ کھیلا جائے گا۔پی پی ایل نے کولیفائنگ راﺅنڈ اور فائنل راﺅنڈ کھیلنے والی ٹیموں کے لئے پرکشش مراعات اور انعامات کے ساتھ ساتھ پورے ٹورنامنٹ کے لئے 15 ملین روپے کا بجٹ مختص کیا ہے۔

ایم ڈی و سی ای او پی پی ایل سید وامق بخاری نے مقامی افراد کی شرکت پر ان کا شکریہ ادا کیا اور ٹورنامنٹ کے موئثر انتظامات پر بلوچستان کی صوبائی حکومت،سدرن کمانڈ ایچ کیو 33 ڈویژن اور پاکستان فٹبال فیڈ ریشن کی تعریف کی۔

پی پی ایل اور بلوچستان کے درمیان 1952 میں سوئی گیس فیلڈ کی دریافت سے اب تک 60 سال سے زائد عرصے کی طویل وابستگی رہی ہے۔ کمپنی نے کارپوریٹ سماجی ذمہ داری کے تحت گراں قدر اقدامات کئے ہیں جو وسیع سطح پر مقامی آبادی اور صوبے کو سہولیات فراہم کر رہے ہیں۔